102

روح کا ناشتہ کیا ھے ؟

روح کا ناشتہ کیا ھے ؟

شیخ الاسلام حضرت مفتی
تقی عثمانی دامت برکاتھم
فرماتے ہیں
ایک مرتبہ میں اپنے پیرو مرشد
حضرت ڈاکٹر عبدالحی صاحب
کے ساتھ سفر میں تھا.
حضرت کی خدمت میں فجر کے بعد حاضری ھوئی
تو حضرت نے پوچھا کہ بھائی ناشتہ کرلیا ھے
ہم نے کہا حضرت ابھی نہیں کیا
وہ فرمانے لگے کیوں نہیں کیا ؟
ہم نے کہا کہ میزبان ناشتہ نہیں لاے
پھر فرمایا میں اس ناشتہ کی بات نہیں کررہا ،
میں تو روح کے ناشتہ کی بات کررہا ھوں
جو تمہارے اپنے اختیار میں ھے
صبح خو کچھ وقت نکال کر
اللہ کا ذکر کر لیا کرو
یہ تمہاری روح کا ناشتہ ھے
جب آدمی صبح کو کچھ کھانے کی چیز کھاتا ھے تو اس ناشتہ سے جسم میں تقویت پیدا ھوتی ھے ،
اگر انسان ناشتے کے بغیر گھر سے نکل جاے تو کا م کرنے میں دشواری ھوگئ
اسی طرح تم جب اللہ تبارک وتعالی کی بارگاہ میں حاضر ھوکر اللہ جل جلالہ کا ذکر کر لو گے تو یہ تمہارا روحانی ناشتہ ھوجاے گا
اور تمہاری روح کو تقویت حاصل ھوجاے گی
اس کے بعد جب تم باہر نکلو گے تو تمہارا نفس وشیطان کے ساتھ مقابلہ پیش آے گا
اگر تم نے روح کا ناشتہ کیا ھوگا
تو تمہارے اندر نفس وشیطان سے مقابلہ کرنے کی طاقت ھوگئ
اور پھر وہ تم پر غالب نہیں آسکیں گے۔

درس شعب الایمان ص150
حضرت مفتی تقی عثمانی صاحب دامت برکاتھم

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں