97

کیا غیر جاندار چیزوں کا انشورنس جائز ہے

سوال:
کیا غیر جاندار چیزوں کا انشورنس جائز ہے جیسے گھر، گاڑی؟ اور اس میں نوکری کرنے کا کیا حکم ہے؟ (۲)کیاموبائل سے میسج کے ذریعہ سے قرآن اور حدیث کا ترجمہ ، دین کی باتیں دوسروں کو بھیج سکتے ہیں؟

بسم الله الرحمن الرحيم

گھر کا انشورنس کرانا جائز نہیں ہے، اس میں سود وقمار (جوا) پایا جاتا ہے اور ان دونوں کی حرمت نص قطعی سے ثابت ہے، البتہ گاڑی کا ایسا ا نشورنس کرنے کی گنجائش ہے جس میں معاوضہ نہ ملتا ہو، کیونکہ بدون انشورنس کرائے گاڑی چلانا ممنوع ہے۔ (ب) کس قسم کی ملازمت کرنے کا حکم معلوم کرنا چاہتے ہیں؟ انشورنس کمپنی میں لکھا پڑھی کی ملازمت کرنا یا ایجنٹ کے طور پر کام کرنا جائز نہیں ہے۔

(۲) کوئی ضروری بات بطور پیغام کے بھیجنا جس میں دینی بات یا ترجمہ قرآن کی بے ادبی ہونے کا اندیشہ نہ ہو، جائز ہے۔

واللہ تعالیٰ اعلم

دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں